Home Cricket استعفیٰ معمہ بن گیا، پی سی بی نے یونس خان کی باتوں...

استعفیٰ معمہ بن گیا، پی سی بی نے یونس خان کی باتوں کو جھٹلا دیا، نئی بحث چھڑ گئی

پاکستان کرکٹ بورڈ کے ڈاکٹر ریاض نے11 جون کوایک ای میل اور پاکستانی کرکٹ ٹیم کے واٹس ایپ گروپ میں تمام کھلاڑیوں ،کوچز اور ٹیم آفیشلز کو یہ اطلاع دی تھی کہ اگر وہ پاکستان سپر لیگ سکس کے لئے ابوظبی میں موجود نہیں ہیں تو20 جون کو تین بجے تک لاہور پہنچ جائیں ،تمام لوگوں کو21 جون کو لاہور کے فائیو اسٹار ہوٹل پہنچنے کی ہدایت کی گئی تھی ہوٹل پہنچتے ہی تمام کھلاڑیوں اور آفیشلز کے پی سی آر ٹیسٹ ہونا تھے۔ جنگ کے پاس موجود ای میل کی کاپی کے دستاویزی ثبوت موجود ہیں جس سے پاکستان ٹیم کے سابق بیٹنگ کوچ یونس خان کے اس دعوی کی نفی ہوتی ہے انہیں بایو سیکیور ببل کے لئے کسی نے پیشگی اطلاع نہیں دی تھی

۔پی سی بی کا دعوی ہے کہ یونس خان کو دھمکی دینے کی باتوں میں کوئی صداقت نہیں ہے۔پاکستان کی طرف سے ٹیسٹ کرکٹ میں سب سے زیادہ سنچریاں اور رنز بنانے والے بیٹسمین یونس خان جو اپنے جذباتی فیصلوں کے حوالے سے بھی جانے جاتے ہیں، کبھی بھی کرکٹ اسٹیبلشمنٹ کے فیورٹ نہیں رہے۔ کچھ لوگوں کی رائے میں میں یہ یونس خان کا غیر لچکدار مزاجہے جس کی وجہ سے ان کی پاکستان کرکٹ بورڈ سے کبھی نہیں بنی۔

سابق کپتان یونس خان ایک بار پھر شہ سرخیوں میں ہیں۔ اور اس بار وجہ ہے ان کا حال ہی میں پاکستانی کرکٹ ٹیم کے بیٹنگ کوچ کی حیثیت سے عہدہ چھوڑنا ایک اور تنازع کا سبب بنا۔

پی سی بی کے ذمے دار ذرائع کا دعوی ہے کہ یونس خان کو بھی ای میل بھیجی گئی تھی جس دن یونس خان نے استعفی دیا تھا اس دن صبح سویرے انہوں نے واٹس ایپ گروپ سے خود کو الگ کردیا تھا۔ اس سے قبل ہونے والی تمام معلومات میں یونس خان کو بھی شریک رکھا گیا تھا۔ نجی ٹی وی کے انٹر ویو میں یونس خان نے استعفے کی وجوہات بتاتے ہوئے دعوی کیا تھا کہلاہور میں کیمپ تھا پی سی بی نے بائیو سیکیور ببل سے متعلق نہیں بتایا تھا، سب کو بتایا میری سرجری ہے پھر بھی میں کیمپ میں شامل ہوا، تین جون کو پی سی بی کی کال آئی کہ آپ کی فلائٹ بک کرلی گئی ہے۔

یونس خان نے بتایا کہ 22 جون کو ڈاکٹر کی کال آئی کہ آپ نے بائیو سیکیور ببل جوائن نہیں کیا، میں نے انہیں کہا میری سرجری ہے میں بائیو سیکیور ببل میں نہیں آسکتا۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ لاہور میں پاکستانی ٹیم کو روانگی سے قبل 25 جون تک قرنطینہ میں رہنا تھا۔ پی سی بی کے حددرجہ مصدقہ ذرائع کا کہنا ہے کہ یونس خان روانگی سے دو دن پہلے ببل جوائن کرنا چاہتے تھے

ڈائریکٹر انٹر نیشنل کرکٹ ذاکرخان نے فون کرکے یونس خان کو بتایا کہ انگلش بورڈ کے ساتھ ہمارے ایم او یو کے تحت ہم کسی کھلاڑی کو یہ رعایت نہیں دے سکتے کہ وہ تاخیر سے ببل جوائن کرے

لہذا آپ کو20جون کو ہی ببل میں رپورٹ کرنا ہوگی جب یونس خان نے اپنے دانتوں کے علاج کا ذکر کیا کہ تو انہیں بتایا گیا کہ آپ کو انگلینڈ میں بھی دانتوں کی تکلیف ہوسکتی ہے اس لئے آپ اس دورے کو چھوڑ کر ویسٹ انڈیز چلے جائیں کیوں کہ انگلینڈ کے دورے میں ببل سے نکل کر دانتوں کا علاج کرانا آسان نہیں ہوگا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ذاکر خان نے یونس خان سے کہا تھا کہ پانچ دن کے ببل میں ہم کسی کھلاڑی کو رعایت نہیں دے سکتے ماضی میں محمد حفیظ کو بھی رعایت نہیں دی گئی تھی ۔

پی سی بی کا دعوی ہے کہ یونس خان کو دھمکی دینے کی باتوں میں کوئی صداقت نہیں ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ یونس خان کے ساتھ معاملات طے ہوئے تھے کہ وہ اور پی سی بی اس حساس معاملے پر کوئی بات نہیں کریں گے لیکن یونس خان نے انٹر ویو دے کر وعدے کی پاسداری نہیں کی۔

(function() {

var loaded = false;
var loadFB = function() {
if (loaded) return;
loaded = true;
(function (d, s, id) {
var js, fjs = d.getElementsByTagName(s)[0];
if (d.getElementById(id)) return;
js = d.createElement(s);
js.id = id;
js.src = “http://connect.facebook.net/en_US/sdk.js#xfbml=1&version=v3.0”;
fjs.parentNode.insertBefore(js, fjs);
}(document, ‘script’, ‘facebook-jssdk’));
};
setTimeout(loadFB, 0);
document.body.addEventListener(‘bimberLoadFbSdk’, loadFB);
})();